ہر جنازے کے لیے اپنی دوکان بند کر دینے والا غریب درزی کی جب وفات ہوئی تو کیا معجزانہ کام ہوا؟ ایمان افروز واقعہ

لاہور(ویب ڈیسک) لکھنؤ کے ایک غریب درزی کی کہانی جو اپنے علاقے میں ہر مرنے والے کے جنازے میں شامل ہوتا تھا اور وہ اسے جیسے بھی جانا پڑے ، چاہے دکان بند کرنا پڑے یا جو بھی ہو اور کہتا تھا کہ میرے جنازے پر کون آئے گا میں تو ایک غرین آدمی ہوں اور نہ ہی کوئی مجھے جانتا ہے ۔

پاک کی شان دیکھیںکہ 1902ء میں مولانا عبدالحئ لکھنوی صاحب کا انتقال ہوا ریڈیو پر بتلایا گیا اخبارات میں جنازے کی خبر آگئی.. جنازے کے وقت لاکھوں کا مجمع تھا. پھر بھی بہت سے لوگ انکا جنازہ پڑھے سے محروم رہ گئے جب جنازہ گاہ میں ان کا جنازہ ختم ہوا تو اسی جگہ اس کے جنازے کو رکھ دیا گیا اعلان ہوا کہ ایک اور میت ہے اور جتنے لوگ بھی مولانا کے جنازے میں شامل تھے سارے کے سارے اس درزی کے جنازے میں شامل تھے ۔۔ سبحان اللہ

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.

site-verification: a5f3ae327aefe7db9b1fdb6f7c6a8b26