گجرات کی دو بہنیں لڑکا بن گئیں

گجرات کی دو بہنیں لڑکا بن گئیں
اسلام آباد13 اور 15 سالہ بچیوں کا پمز اسپتال اسلام آباد میں کامیاب آپریشن کیا گیا
گجرات ( 22 اکتوبر2020ء) گجرات کی دو بہنیں لڑکا بن گئیں۔تفصیلات کے مطابق گجرات کی دو بہنوں کی جنس تبدیل ہو گئی، پمز اسپتال اسلام آباد میں دونوں بہنوں کو کامیاب آپریشن کیا گیا۔ جوائنٹ ڈپٹی ڈائریکٹر پمز اسپتال ڈاکٹر امجد چوہدری کا کہنا ہے کہ کچھ روز قبل دونوں بچیوں کو پمز لایا گیا تھا۔انہوں نے بتایا کہ پمز اسپتال میں 13 اور 15 سال کی بہنوں کا کامیاب آپریشن کیا گیا۔

گجرات سے تعلق رکھنے والے خاندان کی دو بیٹیاں تھیں جو کہ دونوں اب بیٹا بن چکی ہیں،بچیوں کے بیک گراؤنڈ کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر کا کہنا تھا کہ ان کی آواز کافی بھاری ہو چکی تھی اور دیگر مسائل کا بھی سامنا تھا جس کے بعد دونوں کے آپریشن کا فیصلہ کیا گیا۔والدین کی جانب سے دونوں بیٹوں کے اب نئے نام بھی رکھے جائیں گے۔ رواں ماہ سرگودھا میں چھ سالہ لڑکی آپریشن کے بعد لڑکا بن گئی تھی،سرگودھا کے نواحی علاقے فاروق آباد میں محنت سالہ شخص کی بیٹی آپریشن کے بعد لڑکا بن گئی بتایا گیا کہ رضا پارک کا رہائشی ثمر عباس بیٹی کے پیٹ میں تکلیف ہونے کے باعث ہسپتال لے گیا جہاں سینئر سرجن ڈاکٹر رانا عبداللہ نے جنس تبدیلی کا آپریشن کر کے چھ سالہ لڑکی کو لڑکا بنا دیا۔
لڑکی کو پیٹ کے درد کے باعث ہسپتال لے جایا گیا۔ جہاں اس کی جنس تبدیل کر دی گئی۔ ذرائع کے مطابق لڑکی کے والد کا کہنا تھا کہ یہ ان کے لیے بہت خوشی کا موقع ہے کہ ان کی بیٹی کی جنس تبدیل ہوگئی، ان کا کہنا تھا کہ پہلے مجھے بیٹی کے لیے لڑکا ڈھونڈنا پڑنا تھا اب بیٹے کے لیے خوبصورت بہو تلاش کروں گا، لڑکی کے والد نے اس واقعے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس کی ایک ہی اولاد تھی جو کنزا تھی، اب آپریشن کے بعد وہ لڑکا بن کر اس کا سہارا بن چکی ہے۔ جنس تبدیلی کے بعد لڑکی کا نام عبداللہ رکھا گیا۔ لڑکی نے بھی لڑکا بننے پر خوشی کا اظہار کیا اور کہا کہ وہ اپنے والد کا سہارا بننے کا عزم رکھتا ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.