امت مسلمہ کے لیے افسوس ناک خبر :متحدہ عرب امارات، فرانسیسی صدر کے اسلام مخالف بیان کی حمایت میں سامنے آ گیا

لاہور(ویب ڈیسک)متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ انور غرقاش نے فرانس کے صدر ایمانوئیل میکرون کے اسلام مخالف بیان کی حمایت کردی ہے۔جرمن ڈیلی ویلٹ کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ انور غرقاش نے اس دعویٰ کو مسترد کردیا ہے جس میں کہا جارہا ہے کہ ایمانوئیل میکرون نے

مسلمانوں اور اسلام کے خلاف توہین آمیز بیان دیا ہے۔انور غرقاش نے کہا کہ” ہمیں میکرون کے بیان کو بغور سننا چاہیے، وہ مغرب میں مسلمانوں کو تنہا نہیں کرنا چاہتے، اور وہ درست کہہ رہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ مغربی ممالک میں مسلمانوں کو بہتر طریقے سے ضم ہونا چاہیے اور فرانسیسی حکومت کو اس مقصد کے حصول کیلئے طریقے تلاش کرنے کا اختیار بھی ہونا چاہیے۔انور غرقاش نے تمام تر تنازعے کا ملبہ ترک صدر رجب طیب اردوگان پر ڈالتے ہوئے کہا کہ جیسے ہی طیب اردوگان کوئی کمزوری دیکھتے ہیں وہ اسے اپنا اثر بڑھانے کیلئے استعمال کرتے ہیں۔اس سے قبل ابو ظہبی کے پرنس محمد بن زید نے بھی فرانسیسی صدر کو ٹیلی فون کرکے اپنی حمایت ظاہر کی، بات چیت کے دوران انہوں نے فرانس میں ہونے والے حملوں کو اسلامی تعلیمات کے منافی قرار دیا اور ان کی مذمت کی۔یاد رہے کہ فرانسیسی صدر نے حضور اکرم ﷺ کے توہین آمیز خاکوں کے شائع ہونے کے بعد اسے اظہار رائے کی آزادی قرار دے کر اسلام کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا جس کے بعد فرانس میں مظاہرے شروع ہوگئے تھے جس میں شریک مسلمانوں کے خلاف قانون نافذ کرنے والے اداروں کو متحرک کیا گیا تھا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.