اسرائیل کو تسلیم کرو ورنہ ۔۔۔ ! 24گھنٹے کا الٹی میٹم دیدیا گیا ، ایسا نہ کرنے پر کون سے سنگین نتائج بھگتنا پڑیں گے ؟ امریکہ نے دھمکی دے ڈالی

خرطوم(ویب ڈیسک) امریکہ نے سوڈان کو اسرائیل کے ساتھ روابط کی برقراری کیلئے 24 گھنٹے کا الٹی میٹم دے دیا ہے۔سعودی میڈیا نے سوڈان کے سرکاری ذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ واشنگٹن نے سوڈان کو اسرائیل کے ساتھ روابط کی برقراری کیلئے 24 گھنٹے کا الٹی میٹم دیا ہے۔سوڈان کے سرکاری ذرائع کے

مطابق یہ الٹی میٹم امریکہ میں 3 نومبر کو ہونے والے صدارتی انتخابات کے قریب ہونے کی وجہ سے دیا گیا ہے۔سوڈان کے سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ سوڈان کو ٹیرارزم کی لسٹ سے نکالنے اور تعلقات کی برقراری کیلئے امریکہ اور سوڈان کے مابین مذاکرات تعطل سے دوچار ہوئے ہیں۔سوڈان گزشتہ ایک سال سے اس کوشش میں ہے کہ اس کا نام امریکہ کی بلیک لسٹ سے نکل جائے اور امریکہ اسے نام نہاد ٹیرارزم کی فہرست سے نکال دے۔سوڈان پر اسرائیل کے ساتھ روابط کی برقراری کیلئے امریکا کا دبائو ایسے وقت میں جاری ہے کہ جب سوڈان کی مجمع فقہ اسلامی نے اسرائیل کے ساتھ ہر قسم کے روابط کی برقراری کو حرام قرار دیا ہے۔واضح رہے کہ صیہونی حکومت اور متحدہ عرب امارات اور بحرین نے 13 اگست کو باہمی تعلقات کو معمول پر لانے کے لئے ایک سمجھوتے پر دستخط کئے جس کی عالمی سطح پر سخت مذمت کی گئی۔ مطابق یہ الٹی میٹم امریکہ میں 3 نومبر کو ہونے والے صدارتی انتخابات کے قریب ہونے کی وجہ سے دیا گیا ہے۔سوڈان کے سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ سوڈان کو ٹیرارزم کی لسٹ سے نکالنے اور تعلقات کی برقراری کیلئے امریکہ اور سوڈان کے مابین مذاکرات تعطل سے دوچار ہوئے ہیں۔سوڈان گزشتہ ایک سال سے اس کوشش میں ہے کہ اس کا نام امریکہ کی بلیک لسٹ سے نکل جائے اور امریکہ اسے نام نہاد ٹیرارزم کی فہرست سے نکال دے۔سوڈان پر اسرائیل کے ساتھ روابط کی برقراری کیلئے امریکا کا دبائو ایسے وقت میں جاری ہے کہ جب سوڈان کی مجمع فقہ اسلامی نے اسرائیل کے ساتھ ہر قسم کے روابط کی برقراری کو حرام قرار دیا ہے۔واضح رہے کہ صیہونی حکومت اور متحدہ عرب امارات اور بحرین نے 13 اگست کو باہمی تعلقات کو معمول پر لانے کے لئے ایک سمجھوتے پر دستخط کئے جس کی عالمی سطح پر سخت مذمت کی گئی۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.